Results 1 to 2 of 2

Thread: دل میں لرزاں ہے ترا شعلۂ رخسار اب تک

  1. #1
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    25,270
    Mentioned
    1562 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5876
    Rep Power
    214780

    New5555 دل میں لرزاں ہے ترا شعلۂ رخسار اب تک


    دل میں لرزاں ہے ترا شعلۂ رخسار اب تک
    میری منزل میں نہیں رات کے آثار اب تک

    پھول مُرجھا گئے، گُلدان بھی گِر کر ٹوٹا
    کیسی خوشبو میں بسے ہیں در و دیوار اب تک

    حسرتِ دادِ نہاں ہے مرے دل میں شاید
    یاد آتی ہے مجھے قامتِ دلدار اب تک

    وہ اُجالے کا کوئی سیلِ رواں تھا، کیا تھا؟
    میری آنکھوں میں ہے اک ساعتِ دیدار اب تک

    تیشۂ غم سے ہوئی روح تو ٹکڑے ٹکڑے
    کیوں سلامت ہے مرے جسم کی دیوار اب تک



    2gvsho3 - دل میں لرزاں ہے ترا شعلۂ رخسار اب تک

  2. #2
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    25,270
    Mentioned
    1562 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5876
    Rep Power
    214780

    Default Re: دل میں لرزاں ہے ترا شعلۂ رخسار اب تک

    2gvsho3 - دل میں لرزاں ہے ترا شعلۂ رخسار اب تک

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •