Results 1 to 6 of 6

Thread: زمستاں مرے جسم میں موجزن ہے

  1. #1
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    20,305
    Mentioned
    1562 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5862
    Rep Power
    214774

    New5555 زمستاں مرے جسم میں موجزن ہے


    زمستاں مرے جسم میں موجزن ہے

    کوئی بات کہہ کے،
    میں جب اپنی سانسوں کو کہرے میں لپٹی ہوئی
    شاہراہوں پہ چلتے ہوئے دیکھتا ہوں
    تو بے روئے سانسوں کا جالا سا چاروں طرف پھیلتا ہے
    اور آگے کی چیزوں ہیولوں کی مانند بنتی بگڑتی ہیں
    تب لوگ کہتے ہیں
    ۔یہ رُت زمستاں کے کھلنے کی ہے۔
    اور میں سوچتا ہوں
    ۔زمستاں کہاں ہے
    دھُواں بنتی سانسوں میں!
    آنسو کے جالے میں!
    یا ان ہیولوں کے بننے بگڑنے میں یا۔۔۔۔۔۔۔

    اگر یہ حقیقت میں فصلِ زمستان ہے تو کس سے پوچھوں
    کہ جو اتنے موسم گئے اور آئے
    سبھی کی شباہت زمستاں سی کیوں تھی؟
    ۔۲۔
    کئی سال گزرے
    انہی شاہراہوں پہ چلتے ہوئے ہم کوئی بات کہہ کے
    دھُواں بنتی سانسوں میں اپنے ہی الفاظ کو دیکھتے تھے
    نجانے میں اس وقت کیا کہہ رہا تھا!
    کہ تُم تھے جو کچھ کہتے کہتے اچانک رُکے تھے!
    کہ پھر یہ زمستاں تھا جس نے کوئی ان کہی بات کاٹی تھی !
    کچھ ٹھیک سے یاد آتا نہیں۔۔۔
    صرف اتنا پتا ہے
    کہ اس دن سے آنکھوں میں آنسو کے جالے ہیں
    آگے کی چیزیں ہیولوں کی مانند بنتی بگڑتی ہیں۔۔۔
    بنتی بگڑتی ہیں۔۔۔بنتی بگڑتی چلی جا رہی ہیں
    ۔۳۔
    زمستاں جدائی کے موسم کا اک آئینہ ہے
    اور اس آئینے میں
    تمہیں جس گھڑی میں مسافت کی پھیلی ہوئی دھُند میں دیکھتا ہوں
    مجھے ایسا لگتا ہے
    جیسے ہر اک شے اسی ایک لمحے سے پیدا ہوئی ہے
    ہر اک رُت اسی خواب کا عکس ہے ، سارے موسم مرے
    جسم میں موجزن ہیں
    لہو کے سمندر کی امواج ہیں
    زمیں ، آسماں، پھول، تارے ، ہوائیں، سمندر، جزیرے پہاڑ اور ندیاں
    تمہارے ہی چہرے کے بھُولے ہوئے نقش ہیں اور موسم،
    ازل سے ابد تک کا ہر ایک موسم
    جُدائی کے موسم کی تجرید ہے۔۔۔
    ۔۴۔
    زمستاں مرے ہست کا استعارہ ہے، وہ آئینہ ہے
    جو کھوئے ہوئے عکس کا ترجماں ہے
    جُدائی کے لمحے سے کچھ دیر پہلے جو تُم مسکرائے تھے
    اس کا گماں ہے
    کوئی بات کہہ کے
    میں جب اپنی سانسوں کو کہرے میں لپٹی ہوئی شاہراہوں
    پہ چلتے ہوئے دیکھتا ہوں تو بے روئے آنسو کا جالا سا چاروں
    طرف پھیلتا ہے اور آگے کی چیزیں ہولوں مانند بنتی بگڑتی ہیں
    میں سوچتا ہوں
    زمستاں کہاں ہے
    ۔۔۔۔۔۔



    2gvsho3 - زمستاں مرے جسم میں موجزن ہے

  2. #2
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    20,305
    Mentioned
    1562 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5862
    Rep Power
    214774

    Default Re: زمستاں مرے جسم میں موجزن ہے

    2gvsho3 - زمستاں مرے جسم میں موجزن ہے

  3. #3
    Join Date
    Dec 2009
    Location
    SAb Kya Dil Mein
    Posts
    12,638
    Mentioned
    1006 Post(s)
    Tagged
    2307 Thread(s)
    Thanked
    102
    Rep Power
    21474859

    Default Re: زمستاں مرے جسم میں موجزن ہے

    Thanks For Sharing





  4. #4
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    20,305
    Mentioned
    1562 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5862
    Rep Power
    214774

    Default Re: زمستاں مرے جسم میں موجزن ہے

    پسند اور رائے کا شکریہ
    2gvsho3 - زمستاں مرے جسم میں موجزن ہے

  5. #5
    sea's Avatar
    sea is offline Don't just exit.....Live!
    Join Date
    Jan 2020
    Location
    Pak
    Posts
    9
    Mentioned
    617 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)
    Thanked
    11
    Rep Power
    0

    Default Re: زمستاں مرے جسم میں موجزن ہے

    main sochta hun زمستاں kahan hain..umdaah


  6. The Following User Says Thank You to sea For This Useful Post:


  7. #6
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    20,305
    Mentioned
    1562 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5862
    Rep Power
    214774

    Default Re: زمستاں مرے جسم میں موجزن ہے

    Quote Originally Posted by sea View Post
    main sochta hun زمستاں kahan hain..umdaah
    شکریہ
    2gvsho3 - زمستاں مرے جسم میں موجزن ہے

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •