Results 1 to 4 of 4

Thread: اشک غم آنکھ سے باہر بھی نہیں آنے کا

  1. #1
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    25,275
    Mentioned
    1562 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5878
    Rep Power
    214782

    New5555 اشک غم آنکھ سے باہر بھی نہیں آنے کا

    اشک غم آنکھ سے باہر بھی نہیں آنے کا
    ابر چھٹ جائیں وہ منظر بھی نہیں آنے کا

    اب کے آغاز سفر سوچ سمجھ کے کرنا
    دشت ملنے کا نہیں گھر بھی نہیں آنے کا

    ہائے کیا ہم نے تڑپنے کا صلہ پایا ہے
    ایسا آرام جو آ کر بھی نہیں آنے کا

    عہد غالبؔ سے زیادہ ہے مرے عہد کا کرب
    اب تو کوزے میں سمندر بھی نہیں آنے کا

    سبزہ دیوار پہ اگ آیا ظفرؔ خوش ہو لو
    آگے آنکھوں میں یہ منظر بھی نہیں آنے کا
    ظفر گورکھپوری



    2gvsho3 - اشک غم آنکھ سے باہر بھی نہیں آنے کا

  2. #2
    Join Date
    Nov 2014
    Location
    Lahore,Pakistan
    Posts
    25,275
    Mentioned
    1562 Post(s)
    Tagged
    20 Thread(s)
    Thanked
    5878
    Rep Power
    214782

    Default Re: اشک غم آنکھ سے باہر بھی نہیں آنے کا

    2gvsho3 - اشک غم آنکھ سے باہر بھی نہیں آنے کا

  3. #3
    Join Date
    Aug 2012
    Location
    Baazeecha E Atfaal
    Posts
    14,528
    Mentioned
    1112 Post(s)
    Tagged
    210 Thread(s)
    Thanked
    324
    Rep Power
    25

    Default Re: اشک غم آنکھ سے باہر بھی نہیں آنے کا

    Bohat Khoob Janaab :-)
    (-: Bol Kay Lab Aazaad Hai'n Teray :-)


  4. #4
    Join Date
    Dec 2009
    Location
    SAb Kya Dil Mein
    Posts
    12,684
    Mentioned
    1006 Post(s)
    Tagged
    2307 Thread(s)
    Thanked
    103
    Rep Power
    21474861

    Default Re: اشک غم آنکھ سے باہر بھی نہیں آنے کا

    khoob






Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •